2018 December 13
یمن میں سعودی مظالم پر خاموش وزیر خارجہ کا جوابی میزائل حملے کی مذمت بھی قابل مذمت ہے، ناصر شیرازی
مندرجات: ١٤٢٠ تاریخ اشاعت: ٢٨ March ٢٠١٨ - ١٣:٠٩ مشاہدات: 106
خبریں » پبلک
یمن میں سعودی مظالم پر خاموش وزیر خارجہ کا جوابی میزائل حملے کی مذمت بھی قابل مذمت ہے، ناصر شیرازی

شیعیت نیوز: مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل سید ناصرعباس شیرازی نے یمن کے دارالحکومت صنعا پرسعودی امریکی اتحاد کے غیر انسانی اور وحشیانہ بمباری کے 3 خونریز سال مکمل ہونے پر اپنے ایک بیان میں کہاہے کہ لاکھوں لوگ بدترین حملوں کے دوران یمنی افواج اور مقامی حوثی رہنمائوں سے اظہار عشق و عقیدت کے لیے متحد ہو کر مظاہرہ کر رہے ہیں ۔تمام فرقے اور مسالک امریکی اور اسرائیلی ایماء پر سعودی قیادت میں یمن پر مسلط کردہ جنگ کی مذمت میں یکجا ہیں۔

ناصر شیرازی کاکہنا تھاکہ خبروں کے مطابق اس موقع پر یمنی افواج نے جارح ملک پر 7 میزائل بھی داغے جس سے ایک ہلاکت کی اطلاع بھی ہے جبکہ اقوام متحدہ کے اب تک سعودی حملوں میں مارے جانے والے بے گناہ یمنییوں کی تعداد 14000 سے زائد ہے جن میں اکثریت بچوں اور خواتین کی ہے۔2 کروڑ 20 لاکھ لوگ شدید قحط کا شکار ہیں اور لاکھوں لوگ بے گھر ہو چکے ہیں ۔پاکستانی وزیر خارجہ خواجہ آصف نے 3 سال بعد یمن کے جوابی میزائل حملوں کی مذمت تو کی ہے لیکن آج تک یمنی سرزمین پر سعودی مداخلت،بدترین فوجی جارحیت اور وحشیانہ بمباری کے نتیجے میں مارے جانے والے بے گناہ شہریوں کی ہلاکت پر مذمتی بیان تک جاری نہیں کیا ہے۔

انہوںنے کہاکہ جب ہم خود دوہرے معیارات رکھیں گے اور غلامانہ زہنیت پر عمل کریں گے تو ہم کبھی آل سعود کے انڈیا اور اسرائیل سے تاریخی سطح پر پہنچ چکے تعلقات کو زیر سوال نہیں لا سکیں گے اور نہ ہی کبھی سعودی عرب کی اندھی حمایت کرتے ہوئے یہ پوچھ سکیں گے کہ آج تک سعودی عرب کشمیریوں کی حمایت اور ان پر جاری بے پناہ ظلم و ستم پر کیوں خاموش ہے






Share
* نام:
* ایمیل:
* رائے کا متن :
* سیکورٹی کوڈ:
  

آخری مندرجات
زیادہ زیر بحث والی
زیادہ مشاہدات والی