2018 October 18
یمن کے کئی صوبوں میں سعودی عرب کی وحشیانہ جارحیت، متعدد عام شہری شہید اور زخمی
مندرجات: ١٣٣٣ تاریخ اشاعت: ٠١ March ٢٠١٨ - ١٧:٣٢ مشاہدات: 94
خبریں » پبلک
یمن کے کئی صوبوں میں سعودی عرب کی وحشیانہ جارحیت، متعدد عام شہری شہید اور زخمی

یمن کے صوبوں صنعا، الحدیدہ اور صعدہ پر سعودی عرب کے جنگی طیاروں کی وحشیانہ جارحیت میں دسیوں یمنی عام شہری شہید و زخمی ہو گئے۔یمن کے صوبوں صنعا، الحدیدہ اور صعدہ پر سعودی عرب کے جنگی طیاروں کی وحشیانہ جارحیت میں دسیوں یمنی عام شہری شہید و زخمی ہو گئے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ العالم کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کے جنگی طیاروں نے صوبہ صنعا کے علاقے نہم پر شدید بمباری کی جس میں کم از کم پانچ یمنی شہری شہید اور زخمی ہو گئے۔

  سعودی جنگی طیاروں نے اسی طرح صوبے الحدیدہ میں التحتیا کو جارحیت کا نشانہ بنایا جس مں ایک شخص شہید اور ایک زخمی ہو گیا۔

  صوبہ صعدہ میں بھی  سعودی فضائی حملے میں دس سے زا‏د یمنی عام شہری شہید و زخمی ہوئے ہیں ۔

    دوسری جانب یمن میں اقوام متحدہ کی امدادی کارروائیوں کے انچارج جان جنگ نے خبردار کیا ہے کہ یمن پر سعودی اتحاد کے حملوں کی وجہ سے اس ملک میں عام زندگی بالکل مفلوج ہو گئی ہے اور اس ملک میں ہیضے نیز قحط کے بڑھتے ہوئے خطرے کی بنا پر یمن کو انسانی المیے کا سامنا ہے۔انھوں نے منگل کو یمن کے بارے میں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے اجلاس میں کہا کہ یمن کے خلاف تین سال جاری جنگ کی وجہ سے المناک صورت حال کا سامنا ہے اور بے گھر ہونے والے افراد کی تعداد مستقل بڑھتی جا رہی ہے جس سے صورت حال مزید پیچیدہ ہو گئی ہے۔جان جنگ نے کہا کہ یمن میں دو کروڑ، بائیس لاکھ افراد کو خوراک کی فوری ضرورت ہے جن میں سے چوراسی لاکھ افراد کو قحط و بھوک مری کا سامنا ہے۔امدادی امور کے سربراہ کا کہنا ہےکہ اپریل دو ہزار سترہ سے اب تک یمن میں گیارہ لاکھ افراد ہیضے سمیت مختلف وبائی امراض میں مبتلا ہو چکے ہیں۔

  واضح رہے کہ سعودی عرب نے امریکہ اور چند دوسرے ملکوں کی حمایت سے مارچ 2015 سے یمن پر جارحیت شروع کا سلسلہ جاری رکھا ہے جس میں اب تک ہزاروں افراد شہید و زخمی اور لاکھوں بے گھر ہو چکے ہیں جبکہ یمن کے محاصرے کے بعد اس ملک میں انسانی المیہ رونما ہورہا ہے لیکن اس کے باوجود سعودی عرب اپنے مقاصد کے حصول میں ناکام رہا ہے۔




Share
* نام:
* ایمیل:
* رائے کا متن :
* سیکورٹی کوڈ:
  

آخری مندرجات
زیادہ زیر بحث والی
زیادہ مشاہدات والی