2018 October 18
امام خامنہ ای: ایران میں شیعہ سنی دشوارترین میدانوں میں ایک دوسرے کے ساتھ
مندرجات: ١٢٩٨ تاریخ اشاعت: ١٣ February ٢٠١٨ - ١٧:٢٢ مشاہدات: 101
خبریں » پبلک
امام خامنہ ای: ایران میں شیعہ سنی دشوارترین میدانوں میں ایک دوسرے کے ساتھ

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے انجمن شہداء صوبہ سیستان و بلوچستان کے مسئولین سے ملاقات میں میں فرمایا: "اسلامی جمہوریہ ایران میں شیعہ اور سنی دشوارترین میدانوں میں ایک دوسرے کے ساتھ کھڑے ہیں۔"

 امام خامنہ ای: ایران میں شیعہ سنی دشوارترین میدانوں میں ایک دوسرے کے ساتھ

خبر رساں ادارے تسنیم نے رہبر معظم کے دفتر اطلاعات و نشریات کے حوالے سے بتایا ہے کہ امام خامنہ ای نے انجمن شہداء صوبہ سیستان و بلوچستان کے مسئولین سے ملاقات میں کہا کہ سلامی جمہوریہ ایران میں شیعہ اور سنی دشوارترین میدانوں میں ایک دوسرے کے ساتھ ہیں۔

امام خامنہ ای نے اس ملاقات میں سیستان و بلوچستان کے عوام سے نہایت محبت و ہمدلی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے بلوچ قوم کو گرمجوش، باصلاحیت اور بااستعداد جبکہ سیستان کے لوگوں کو تاریخی لحاظ سے ایران کے تمام اقوام میں بے مثال اور درخشان قرار دیا اور کہا کہ ان تمام صلاحیتوں کے باوجود قاجاری اور پہلوی دور میں سیستان و بلوچستان کے لوگوں کو نظرانداز کیا جاتا رہا اور یہی وجہ ہے کہ ان علاقوں کے لوگ اپنی صلاحیتوں کو بروئے کار نہ لاسکے۔

رہبر معظم نے ان علاقوں میں انقلاب کے بعد تکمیل شدہ منصوبوں کو عوام اور نظام کے درمیان محبت و ہمدلی قرار دیکر سیستان و بلوچستان کے گورنر کی جانب سے علاقے کے لوگوں کی سہولیات کیلئے دیگر ضروریات کے مطالبات کی طرف اشارہ کیا اور کہا کہ عوام کے مسائل بالخصوص میٹھے پانی اور ریلوے لائن بچھانے کو حکومتی عہدیداروں تک پہنچانے کے ساتھ ساتھ اس پر فی الفور عمل کیا جائے اور اس سسلسلے میں قومی خزانے سے استفادہ کیا جائے۔

رہبر انقلاب نے سیستان و بلوچستان کو کردستان اور گلستان صوبوں کی مانند وحدت اسلامی کا مظہر اور دنیا کے شیعہ سنی مسلمانوں کیلئے برادرانہ زندگی گزارنے کا نمونہ قرار دیا اور دشمن کی جانب سے تفرقہ ڈالنے کی کوششوں کا ہوشیاری سے مقابلہ کرنے پر تاکید کی۔

انہوں نے کہا کہ دفاع مقدس میں ایک سنی جوان کا شہید ہونا یا انقلاب اسلامی کی خاطر منافقین کے ہاتھوں ایک اہلسنت عالم دین کا شہید ہونا، اس بات کی نشاندہی ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران میں تمام شیعہ اور سنی دشوارترین میدانوں میں بھی ایک ساتھ کھڑے ہیں جبکہ ان حقائق اور حقیقی وحدت کو فن و ثقافت کے ذریعے دنیا پر عیاں کرنا چاہئے۔     

امام خامنہ ای نے کہا کہ عوام کی فداکاری اور قوت ایمانی ہی وہ اسباب ہیں جس کی وجہ سے آج اسلامی جمہوریہ ایران دشمنوں کی عسکری و ثقافتی سازشوں اور عالمی پابندیوں کے باوجود ماڈرن جاہلیت کے مقابلے میں سیسہ پلائی دیوار بن کر کھڑا ہے۔




Share
* نام:
* ایمیل:
* رائے کا متن :
* سیکورٹی کوڈ:
  

آخری مندرجات
زیادہ زیر بحث والی
زیادہ مشاہدات والی