2017 November 24
شیخ ابراہیم زکزکی کو نائجیریا حکومت کےرہا نہ کرنے کے پیچھے سعودی عرب اور امریکہ کا ہاتھ
مندرجات: ١٠٦٠ تاریخ اشاعت: ٠٧ October ٢٠١٧ - ١٦:٥٥ مشاہدات: 33
خبریں » پبلک
شیخ ابراہیم زکزکی کو نائجیریا حکومت کےرہا نہ کرنے کے پیچھے سعودی عرب اور امریکہ کا ہاتھ

نائجیرین حکومت کی جانب سے اسلامی موومنٹ کے سربراہ شیخ ابراہیم زکزکی کو رہا نہ کرنے کے پیچھے سعودی عرب اور امریکہ کا ہاتھ ہے ۔ تفصیلات کے مطابق نائجیریا میں اسلامی تحریک کے ایک فعال رکن کا کہنا ہے کہ نائجیرین حکومت نے امریکہ اور آل سعود کی خوشنودی کے لئے شیخ زکزکی کو رہا نہیں کر رہی ۔

نائجیریا کے سیاسی کارکن “یوسف حمزہ” نے تسنیم نیوز کے نامہ نگار سے گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ شیخ ابراہیم الزکزکی کے بارے میں کسی کے پاس کوئی معلومات نہیں ہیں کہ وہ کس حال میں ہیں، حکومت نے امریکہ اور آل سعود کے کہنے پر علامہ کو قید میں ہی رکھنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔

نائیجریا کی حکومت نے آل سعود کے کہنے پر اس ملک کے شیعیان حیدر کرار خاص کر علامہ شیخ زکزکی کے خلاف متعدد جھوٹے الزامات عائد کر رکھے ہیں۔ دو برس قبل اسلامک موومنٹ آف نائجیریا کے ساڑھے تین سو ارکان فوجی دستوں کے ایک مجلس عزا پر حملوں میں شہید ہو گئے تھے۔

یاد رہے کہ نائجیریا کے اہل تشیع کو اربعین 2015 میں ایک مذہبی اجتماع کے دوران شدید حملوں کا نشانہ بنایا گیا تھا۔نائجیرین فوجیوں نے بندوقوں اور آنسو گیس سے حملہ کرتے ہوئے ایک ہزار سے زائد افراد کو شہید کر دیا تھا۔اس جماعت کے سربراہ ابراہیم زکزکی شدید زخمی حالت میں گرفتار کر لئے گئے تھے جو تاحال نائجیرین اعلی عدالت کی جانب سے رہائی کے حکم کے باوجود زیر حراست ہیں۔اسلامک موومنٹ کے نائجیرین حکومت کے ساتھ تنازعات ایک عرصے سے جاری ہیں۔




Share
* نام:
* ایمیل:
* رائے کا متن :
* سیکورٹی کوڈ:
  

آخری مندرجات
زیادہ زیر بحث والی
زیادہ مشاہدات والی