2017 November 24
خادمین حرمین شریفین کی اپنی ذمہ داریوں سے چشم پوشی؛ کرین حادثے کے ملزمان کو بری کردیا گیا
مندرجات: ١٠٥٧ تاریخ اشاعت: ٠٧ October ٢٠١٧ - ١٣:١٨ مشاہدات: 28
خبریں » پبلک
خادمین حرمین شریفین کی اپنی ذمہ داریوں سے چشم پوشی؛ کرین حادثے کے ملزمان کو بری کردیا گیا

فوجداری عدالت نے حرم کرین کے 13ملزمان کو جملہ الزامات سے بری کردیا ہے‘ ابتدائی فیصلے میں کہا گیا ہے کہ پبلک پراسیکیوشن کی جانب سے حرم کرین کے ملزمان پر جو فرد جرم عائد کی گئی تھی اس سے تمام ملزمان بری ہیں کوئی بھی کسی بھی الزام ثابت نہیں ہوا۔

سعودی میڈیا ذرائع کے مطابق پبلک پراسیکیوشن کے نمائندے نے اس فیصلے پر اعتراض کرتے ہوئے اعلان کیا ہے کہ عدالتی فیصلے کی کاپی ملتے ہی ا یک ماہ کے اندر اس کے خلاف عدالت سے رجوع کیا جائے گا

یاد رہے کہ بن لادن کمپنی کے کئی انجینئرز، عہدیداروں او رملازمین کو سنہ 2015ءمیں حرمِ مکہ میں ہونے والے اس اندوہنا کرین کے حادثے کا ذمہ دار قرار دیا گیا تھا جس میں 111 حجاج شہید اور 394 زخمی ہوئے تھے۔

سعودی عرب کے فرماں روا ‘ خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز نےمعاملے کی شفاف تحقیقات کے لیے تحقیقاتی کمیشن قائم کیا تھا جس کے ذمے حادثے کی مکمل انکوائری رپورٹ مرتب کرنا تھا۔

محکمہ تحقیقات و استغاثہ نے13افراد کے خلاف مقدمہ دائر کیا تھا جن پر متعدد الزامات تھے جن میں سیفٹی نظام کی خلاف ورزی ‘ ہلاکتوں کا سبب بننا ، نجی اور سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے اور سلامتی ضوابط کی خلاف ورزی جیسے سنگین الزامات عائد کئے گئے تھے۔





Share
* نام:
* ایمیل:
* رائے کا متن :
* سیکورٹی کوڈ:
  

آخری مندرجات
زیادہ زیر بحث والی
زیادہ مشاہدات والی